ٹی بی وارڈمکمل منصوبے پر چالیس سال بعد وزیراعلیٰ پنجاب افتتاح دوبارہ کریں گے

ٹی بی وارڈمکمل منصوبے پر چالیس سال بعد وزیراعلیٰ پنجاب افتتاح دوبارہ کریں گے

جہلم(چوہدری عابد محمود+عامر کیانی)پاکستان پیپلز پارٹی کے مکمل منصوبے پر چالیس سال بعد وزیراعلیٰ پنجاب دوبارہ افتتاح کریں گے ،1977میں صوبائی وزیرصحت ملک عبدالقیوم نے بھی افتتاح کیا تھا۔ تفصیلات کے مطابق خادم اعلیٰ پنجاب آج یا کل کسی وقت بھی پاکستان پیپلز پارٹی کی طرف سے ضلع جہلم کے شہریوں کی سہولت کے لیے بنائی گئی ٹی بی وارڈ کا افتتاح کرنے کے لیے جہلم پہنچیں گے وزیراعلیٰ پنجاب کی آمد کے حوالے سے تمام تر تیاریاں مکمل کر لی گئی ہیں ،1977میں جہلم سے تعلق رکھنے والے سابق صوبائی وزیر صحت ملک عبدالقیوم خان نے ضلع جہلم کے شہریوں کے مسائل کو مدنظر رکھتے ہوئے 36بیڈز پر مشتمل ٹی بی وارڈ مکمل ہونے کے بعد افتتاح کیا جسکی تختی آج بھی ٹی بی وارڈ کے داخلی راستے پر آویزاں ہے حکومت پنجاب نے جہلم کے شہریوں سے ہمدردیاں سمیٹنے کی خاطر ٹی بی وارڈ کے نصف حصے کو بند کر کے شعبہ جگر و ہیپا ٹائٹس کا نام دیکر معمر 40سالہ بوسیدہ عمارت پر رنگ روغن کر کے دلہن کی طرح تیار کر دیا ہے اور وزیر اعلیٰ پنجاب کی خوشنودی حاصل کرنے کے لیے افتتاحی تقریب کے حوالے سے تختی بھی نصب کر دی گئی ہے قابل زکر بات یہ ہے کہ 1970میں ضلع جہلم کی آبادی 7/8لاکھ تھی اور اس وقت ٹی بی کی مہلک بیماری کو مد نظر رکھتے ہوئے 36بیڈز پر مشتمل وارڈز مکمل کی گئی جبکہ 2017میں ضلع جہلم کی آبادی 15/16لاکھ تک پہنچ چکی ہے موجودہ منتخب حکمرانوں نے ٹی بی وارڈ میں بیڈز کا اضافہ کرنے کی بجائے نصف وارڈ کا خاتمہ کر کے ضلع جہلم کے شہریوں کو دھوکہ دیتے ہوئے جگر و ہیاٹائٹس کا شعبہ قائم کرنے کا ڈرامہ رچایا ہے اس حوالے سے جہلم کے شہریوں کا کہنا ہے کہ حکومت پنجاب مسائل میں کمی کرنے کی بجائے مسائل میں اضافے کا سبب بن رہی ہے ،47سال قبل مکمل ہونے والے منصوبوں پر تختیاں لگا کر سستی شہرت حاصل کرنے ناکام کوششیں کی جا رہی ہیں